گھر کے کچن سے اس پائوڈر کی ایک چٹکی کھا کر ایک گلاس نیم گرم دودھ پی لیں ، طاقت کے خزانے ابلتے محسوس ہونگے اور آپ کو کبھی کورونا بھی نہیں ہوگا

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا ویکسین کی تیاری کی دوڑ جاری ہے مگر اسی دوران کچھ ایسے طریقے بھی اختیار کیے جا رہے ہیں کہ جب تک ویکسین میسر نہیں آتی تب تک اس موذی وباءسے کسی طور لوگوں کو محفوظ رکھا جا سکے۔ اس پہلو پر کام کرنے والے سائنسدان زیادہ تر غذائی اشیاءپر انحصار کر رہے ہیں۔ سائنسدانوں نے اس حوالے سے کچھ چیزیں بتائی ہیں جو لوگوں کو کورونا وائرس سے کسی طور محفوظ رکھ سکتی ہیں۔ یہ چیزیں ہلدی، بابونہ کی چائے، انار، کنوار گندل (ایلوویرا)اور مالٹا و دیگر کھٹے پھل شامل ہیں۔ سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ان اشیاءمیں ہیسپرٹین، ایلوایموڈین،

>

ایپی جنین اور کیورسٹین سمیت دیگر ’فائٹوکیمیکلز پائے جاتے ہیں جو سارس نامی وباءکے دوران بھی مو¿ثر ثابت ہو چکے ہیں اور اب بھی کئی تحقیقات میں ان کے کورونا وائرس پر کافی مفید اثرات سامنے آئے ہیں۔کیمبرج یونیورسٹی کے پروفیسر روب تھامس کا کہنا تھا کہ ” ان اشیاءکے استعمال سے نہ صرف لوگ کورونا وائرس لاحق ہونے سے محفوظ رہ سکتے ہیں بلکہ اگر کسی کو وائرس لاحق ہو جائے تو یہ اشیاءاس مریض میں وائرس کی شدت کو محدود رکھنے میں اہم کردار ادا کر سکتی ہیں۔ “

Sharing is caring!

Comments are closed.