عشق میں مبتلا لاہور کی لڑکی کا افسوسناک انجام

لاہور (ویب ڈیسک) لڑکا یا لڑکی ماں باپ کے راضا مندی کے شادی کرنا چاہیتا یا چاہتی ہے تو اس کا اکثر انجام برا ہوتا ہے۔اسی طرح ایک وقعہ لیاقت آباد میں 31سالہ نائلہ کے ساتھ ہوا۔ نائلہ کی موت کی واردات ٹریس ہو گئی ، چچا زاد ملزم اعظم گرفتار.تفصیلات کے مطابق لیاقت آباد کی رہائشی نائلہ ایک ماہ قبل اپنے چچا کے بیٹے اعظم سے شادی کرنے کے لیے بغیر بتائے گھر سے چلی گئی تھی۔

جاتی ہوئی 14 لاکھ روپے نقدی اور لاکھوں روپے کے طلائی زیورات بھی اپنے ساتھ لے گئے۔ ملزم اعظم نے نائلہ کے ساتھ لاکھوں روپیہ اور طلائی زیورات دیکھ کر لالچ میں آکر رقم کو ہتھیانے کیلئے نائلہ کو کسی بہانے پر اوکاڑہ لی جا کے اس کی زندگی کا خاتمہ کر دیا۔ اور اسکو کھیتوں میں پھینکنے کے بعد رقم اور طلائی زیورات وغیرہ لے کر کراچی فرار ہو گیا تھا ۔ نائلہ کے ورثاء نے تھانہ لیاقت آباد میں جبکہ اوکاڑہ پولیس نے نامعلوم ملزمان کے خلاف302 کا مقدمہ درج کیا تھا۔انچارج انویسٹی گیشن لیاقت آباد سجاد رشید نے اپنی ٹیم کے ہمراہ ملزم اعظم کو جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے گرفتار کیا۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق پو لیس تھا نہ صد ر پھو لنگر نے پلا ٹ کا جھا نسہ دیکر فا ر م کے پر سا د ہ لو ح لو گو ں سے ہزا ر و ں روپے ہتھیا نے والی خوا تین کو حرا ست میں لے لیا۔ تفصیل کے مطا بق شما ئلہ شر یف اور شبا نہ مبشر خوا تین اپنے آ پ کو یو نا ئٹیڈ ما ر کیٹنگ اینڈ ڈو یلپر کمپنی کی ملا ز م ظا ہر کر کے پلا ٹ دینے کا جھا نسہ دیکر جمبر میں سا د ہ لو ح لو گو ں سے فا ر م کے نا م پر 6ہزا ر روپیہ وصو ل کر رہی تھیں کہ کسی نے پو لیس کو اطلا ع دی کہ نو سر با ز خوا تین لو گو ں کو پلا ٹ کا جھا نسہ دیکر رقم ہتھیا رہی ہیں۔

Sharing is caring!

Categories

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *